Mon. Nov 23rd, 2020

                        محمد فیروز عالم ندوی

۸ فروری ۰۲۰۲ء کو  شہرت یافتہ،مفسرِ قرآن،علوم اسلامیہ کے شیدائی،جامعہ امام ابن تیمیہ کے موسس و بانی،دیگر تعلیمی و رفاہی اداروں کا فعال و متحرک شخص اور صوبہ بہار کے بہترین خوشہ چیں ڈاکٹرمحمد لقمان سلفی کے سانحہ ارتحال کی وجہ سے ایک تعزیتی و تاثراتی پروگرام جامعہ اسلامیہ ریاض العلوم شنکر پور سپول بہار میں رکھا گیا۔جس میں چیرمین جامعہ محمد فیروز عالم ندوی نے ان کی خوبیوں کا شمار کیا اور ان سے اپنے تعلقات و روابط کو بتلاتے ہوئے کہا کہ میں ہمیشہ ڈاکٹر صاحب کو ایک مربی کی حیثیت سے جانا او رپہچانا۔ان کی موت ایک عالم کی موت ہے اس خلا کو پر کرنا بہت ہی مشکل ہے اور ڈاکٹرصاحب ایک شخص ہی نہیں بلکہ ایک عہد تھے۔صوبہ بہار کی تعلیمی پسماندگی اور مسلم سماج و قوم میں علمی جوت جگانے میں ان کا اہم کارنامہ رہا۔انہوں نے اپنی مستعار حیات کے لمحوں کو امت کی اصلاح میں صرف کیا اور اپنی سینکڑوں تصانیف کے ذریعہ فروغ اسلام اور امت کی اصلاح میں کارہائے نمایاں انجام دیے۔اس کے بعد منصور عالم سلفی نے ان کی تصنیفات و تالیفات کا تفصیلی ذکر کیا اور ان کے گراں مایہ تصانیف کو امت کے لیے ایک عظیم سرمایہ بتلایا۔اسی طرح مولانا شمیم اختر ندوی نے ڈاکٹر صاحب کی خدمات کو بہت ہی سراہا اور عربی زبان و ادب میں ان کی خدمات خصوصیت کے ساتھ ذکر کیا۔آج ان کا قائم کردہ ادارہ”جامعہ امام ابن تیمیہ،،سے ہزاروں علم کے متلاشیان اپنی علمی تشنگی بجھا رہے ہیں اور ان کے عظیم کارنامے اور لازوال خدمات کو یاد کررہے ہیں۔آغاز پروگرام میں ڈاکٹر صاحب کی حیات و خدمات کی چند جھلکیاں مولانا صادق جمیل تیمی نے بیان کیا۔
 
  اس غم کے عالم میں فیصل ایجوکیشنل سوسائٹی اور اس کی تمام شعبہ جات (جامعہ اسلامیہ ریاض العلوم شنکر پور،جامعۃ البنات،معہد الفیصل،معہد عبد اللہ بن مسعود لتحفیظ القرآن)کے مجلس تنفیذی،مجلس شوری اور مجلس عمومی کے جملہ اراکین و منسوبین بالخصوص وکیل الجامعہ شیخ اسحاق اصلاحی،شمیم اختر ندوی،منصور عالم سلفی،عبد الغفار سلفی محمد سلیمان محمدی،شفیق اسماعیل سلفی،طارق عبد الحکیم مدنی،محمدطارق عبد الرحمن تیمی اور صادق جمیل تیمی،منیر فضل ندوی،عبد الرزاق سنابلی اور مسعود عالم ندوی و دیگر نے اپنے گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے اور دعا گو ہیں کہ اللہ ان کے مساعی جمیلہ و خدمات جلیلہ کو شرف قبولیت سے نوازے، ان کو جنت الفردوس میں اعلی مقام عطا فرمائے اور پسماندگان کو صبر جمیل کی توفیق دے(آمین)

By sadique taimi

معلم

One thought on “ڈاکٹر محمد لقمان سلفی کی موت امت اسلامیہ کے لیے ناقابل تلافی نقصان:فیروز عالم ندوی”

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *